47

رہزن کمیٹی اور نارروال کے ارسطو نے ڈرامہ رچایا ہوا ہے، فیاض الحسن چوہان

وزیر کالونیزپنجاب فیاض الحسن چوہان کہتے ہیں کہ فارن فنڈنگ کیس میں رہزن کمیٹی اور نارروال کے ارسطو احسن اقبال نے ڈرامہ رچایا ہوا ہے۔پاکستان تحریک انصاف کیلئے پریشانی کی کوئی بات نہیں ہے کیونکہ سپریم کورٹ جوکہ فائنل اتھارٹی ہے فیصلہ ہمارے حق میں دے چکی ہے۔

لاہورمیں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا حنیف عباسی یہی کیس لے کر سپریم کورٹ گئے تھے لیکن انہیں ناکامی ہوئی۔فیاض چوہان نے کہا تحریک انصاف کو فنڈزدینے والے اور پارٹی ایجنٹ تمام لوگ پاکستانی نژاد ہیں۔پیپلز پارٹی نے مارک سیگل کو اپنا ایجنٹ نامزد کئے رکھا جومحترمہ بینظیر کے دورسے ایجنٹ تھے۔اور وہ پاکستانی نہیں ہیں۔انہوں نے کہا جس بندے کو پارٹی نے نکال دیا وہ فارن فنڈنگ کا الزام لگانے لگ گیا۔

لزام لگایا جا رہا ہے کہ تحریک انصاف فارن فنڈنگ کیس کی راہ میں رکاوٹ بن رہی ہے، حالانکہ الیکشن کمیشن نہ تو عدالت ہے نہ ہی ٹربیونل۔شیر چاہے تو اکیلا شکار کرسکتا ہے لیکن یہ سارے گیدڑکی طرح ملکر شکار کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا دو ہزار سولہ میں پاکستان تحریک انصاف کو بلیک میل کرنے کیلئے یہ کیس کیا گیا۔آل شریف، آل زرداری،آل اسفند یاراور آل فضل الرحمان نے لوٹ مار کا بازار گرم کررکھا ہے۔لوٹ مار ایسوسی ایشن کو جگ ہنسائی کے سوا کچھ نہیں ملا۔عمران خان نے پارٹی فنڈز کی ترتیب بنا کرپیسے دے کر الیکشن لڑوانے کی روایات کو ختم کیا۔

احسن اقبال کو نارووال کا ارسطو اور کاہنہ کاچھا کا سقراط قراردیتے ہوئے کہا کہ ان کا اپنا یو اے ای کا خاکروب کا اقامہ بنا ہوا ہے،جس کا مقصد کرپشن کی کمائی چھپانا ہے۔ان کے بھائی کے اوپرسو کروڑ روپے کرپشن کے الزامات ہیں۔جوانہوں نے میٹرو کے نیچے پھول پتیاں لگانے کے دوران کی۔سپریم کورٹ آخری اتھارٹی ہے اور سپریم کورٹ فارن فنڈنگ کے تحت فیصلہ دیا جا چکا ہے۔

اس کیس سے ہمیں کوئی پریشانی نہیں ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں