25

صدر مملکت سے کویتی وزیرِ خارجہ کی ملاقات، تعلقات کو مزید وسعت دینے پر اتفاق

اسلام آباد: پاکستان اور کویت نے تعلیم، صحت، تجارت اور معیشت میں تعاون بڑھانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے دونوں برادر ممالک کے باہمی مفاد میں دو طرفہ تعلقات کو مزید وسعت دینے پر اتفاق کیا ہے۔

یہ اتفاق رائے جمعہ کو صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی اور کویتی وزیرِ خارجہ شیخ ڈاکٹر احمد نصیر المحمد الاحمد الجابر الصباح کی ایوان صدر میں ملاقات کے دوران پایا گیا۔

ایوان صدر سے جاری اعلامیہ کے مطابق پاکستان اور کویت نے تعلیم ، صحت ، تجارت اور معیشت میں تعاون بڑھانے کی ضرورت پر زور دیا ہے، دونوں برادر ممالک نے باہمی فائدے کیلئے دوطرفہ تعلقات میں مزید وسعت لانےپر بھی اتفاق کیا ہے۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان کویت کے ساتھ خوشگوار اور برادرانہ تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے، پاکستان برادر ملک کویت کے ساتھ تعلقات کو مزید فروغ دینا چاہتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم ، صحت اور سائنس کے شعبوں میں تعاون بڑھانے کی صلاحیت موجود ہے، پاکستان کویت کو ہنر مند افرادی قوت اور دیگر پیشہ ور افراد مہیا کرسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کویت کے فوجی اہلکاروں کو اپنے فوجی تربیتی اداروں میں تربیت فراہم کرسکتا ہے، گواد ر بندرگاہ اور سی پیک سے پاکستان کی معاشی و جغرافیائی اہمیت میں اضافہ ہو ا۔ صدر مملکت نے کہا کہ کویت سی پیک کے منصوبوں میں سرمایہ کاری سے معاشی فائدہ اٹھا سکتا ہے۔

صدر مملکت نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں بھارتی مظالم اور انسانی حقوق کی پامالیوں پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری کشمیر کی مسلم آبادی کے خلاف انسانی حقوق کی پامالیاں روکنے کیلئے بھارت پر دباؤ ڈالے۔

کویتی وزیر خارجہ نے کہا کہ مرحوم امیر شیخ صباح الاحمدالصباح کی وفات پر تعزیت کیلئے کویت آمد پر صدر مملکت کے مشکور ہیں، کویت کی ترقی میں پاکستانی کمیونٹی کا اہم کردار اور وہ کویتی ترقیاتی پروگرام کا اہم حصہ ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں