54

عمران صاحب! سب سے پہلے اپنی ذہنی سموگ کا علاج کروائیں، مریم اورنگزیب

جب تک آپ کے ذہن کی سموگ ختم نہیں ہوگی زمینی سموگ کا خاتمہ ناممکن ہے، عمران صاحب کی قیادت میں40 چوروں کا مافیا ملک پرمسلط ہے۔ ترجمان (ن) لیگ مریم اورنگزیب کا ردعمل.مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ عمران صاحب! سب سے پہلے اپنی ذہنی سموگ کا علاج کروائیں، جب تک آپ کے ذہن کی سموگ ختم نہیں ہوگی زمینی سموگ کا خاتمہ ناممکن ہے،عمران صاحب کی قیادت میں40 چوروں کا مافیا ملک پرمسلط ہے،شہبازشریف کی اورنج ٹرین تو10 دسمبر کو شروع ہورہی، آپ پشاورمیٹرو کے کھڈے کب بھریں گے؟ انہوں نے وزیراعظم عمران خان کے بیان پر ردعمل میں کہا کہ عمرا ن خان صاحب! سب سے پہلے اپنی ذہنی سموگ کا علاج کروائیں۔جب تک آپ کے ذہن کی سموگ ختم نہیں ہوگی زمینی سموگ کا خاتمہ ناممکن ہے۔ مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران صاحب شہبازشریف کی اورنج ٹرین تو10 دسمبر کو شروع ہورہی ہے۔ آپ کی پشاورمیٹرو کے ایک ارب کے کھڈے کب بھریں گے؟ عمران صاحب! آپ کے جھوٹے دعوے صرف الہٰ دین کا چراغ ہی پورے کرسکتا ہے۔

پشاورمیٹرو، ایک ارب درخت، ایک کروڑ نوکری، 50 لاکھ گھر اب الہ دین کا چراغ ہی دے گا؟ انہوں نے کہا کہ 30 سال سے جن پرالزام لگا رہے ہیں،اُن کے چوری کئے ہوئے30 پیسے ہی دکھا دیں؟ عمران صاحب عوام کو بتائیں1سال میں ڈاکووں کے لوٹے ہوئے کتنے ارب واپس آئے ہیں؟ انہوں نے کہا کہ عمران صاحب جنہیں چور، ڈاکو، مافیا کہہ رہے ہیں، عوام انہیں دعائیں دے رہے ہیں۔

عمران صاحب کی قیادت میں40 چوروں کا مافیا ملک پرمسلط ہے۔ عمران صاحب “پلے نہیں دھیلہ تے کردی میلہ میلہ“ کی بہترین مثال ہیں۔
واضح رہے وزیراعظم عمران خان نے لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئےکہا کہ حکومت نے سموگ کو ختم کرنے کی پالیسی تیار کرلی ہے، یوروٹو کی بجائے یوروفورتیل امپورٹ کریں گے، جبکہ 2020ء تک تیل سارایورو5پر چلاجائے گا جس سے فضاء میں آلودگی90 فیصد کم ہوجائے گی،آئل ریفائنری، ٹریفک اوربھٹوں کو نئی ٹیکنالوجی پر منتقل کریں گے، لاہور میں 60 ہزار کنالوں میں جنگلات اگائیں گے۔
انہوں نے کہا کہ سموگ کا بچوں بوڑھوں اور سب بڑے متاثر ہورہے ہیں، مجھے شوکے خانم کے ڈاکٹرز نے آج سے دوسال قبل نومبر میں جب سموگ آئی تو بتایا تھا کہ اس سے لوگوں کی زندگیاں کم ہوجائیں گی، بچوں کے پھیپھڑے کم ہونا شروع ہوجائیں گے۔پی ایم ٹو گیس ہے یہ پتلے پتلے سے ذرے پھیپھڑوں اور انتڑیوں میں چلے جاتے ہیں، ہم نے اس کیلئے پالیسی بنائی ہے، اس کے خلاف ایکشن لینے کا فیصلہ کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں