134

محافظوں کا لیویز چیک پوسٹ پر مبینہ فائرنگ کا معاملہ ،سرفراز بگٹی کا ردِعمل آ گیا مقدمہ میرے خلاف سازش ہے،جہاں فائرنگ کا الزام لگایا گیا میں نے اس علاقے کا سفر نہیں کیا۔ سینیٹر سرفراز بگٹی

محافظوں کا لیویز چیک پوسٹ پر مبینہ فائرنگ کا معاملہ ،سرفراز بگٹی کا ردِعمل آ گیا
مقدمہ میرے خلاف سازش ہے،جہاں فائرنگ کا الزام لگایا گیا میں نے اس علاقے کا سفر نہیں کیا۔ سینیٹر سرفراز بگٹی

محافظوں کے لیویز چیک پوسٹ پر مبینہ فائرنگ کے معاملے پر سینیٹر سرفراز بگٹی کا ردِعمل آ گیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ میرے خلاف سازش کی جا رہی ہے۔تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز بتایا گیا تھا کہ سینیٹر سرفراز بگٹی کی لیویز اہلکاروں سے گالم گلوچ اور بدتمیزی کے بعد سرفراز بگٹی کے محافظوں نے لیویز چیک پوسٹ پر فائرنگ کر دی۔
نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق بارکھان میں لیویزچوکی پر سینیٹر سرفراز بگٹی نے اپنے محافظوں کے ہمراہ حملہ کردیا۔ سینسیٹر سرفراز بگٹی نے چوکی پہنچ کر لیویز اہلکاروں سے گاگم گلوچ کی۔ جبکہ سرفراز بگٹی کی ہدایت پر محافظوں نے اندھا دھند فائرنگ کی۔ فائرنگ کے وقت چوکی پر تین لیویز اہلکار موجود تھے۔ سرفراز بگٹی کے محافظوں کی جانب سے لیویز چیک پوسٹ پر حملے کے بعد نائب تحصیلدار کی ہدایت پر سرفراز بگٹی کے محافظوں کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ۔
لیویز تھانے میں درج مقدمے میں 5 دفعات شامل کی گئی ہیں ۔ سرفراز بگٹی کا لیویز سے تصادم کا واقعہ بارکھان کے علاقے کھرچہ میں پیش آیا۔مقدمے میں مختلف دفعات شامل کی گئی ہیں۔ اس پر اب سینیٹر سرفراز بگٹی کا بھی ردعمل سامنے آیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ مقدمہ میرے خلاف سازش ہے،خواہ مخواہ نشانہ بنایا جا رہا ہے۔جہاں فائرنگ کا الزام لگایا گیا میں نے اس علاقے کا سفر نہیں کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں