MARYYAM NAWAZ 116

مریم نواز کی اپنے سسرال میں بھی ایک نہ چلی

اسلام آباد: مریم نواز کی اپنی سسرال میں بھی ایک نہ چلی، شوہر صفدر اعوان کے بھائی نے اسپیکر قومی اسمبلی کو بھجوائے گئے استعفے کی تصدیق کرنے سے انکار کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے 2 ایم این ایز نے اسپیکر قومی اسمبلی سے ملاقات کرکے تحریری استعفوں سے اظہار لاتعلقی کرتے ہوئے منظور نہ کرنے کی درخواست کردی۔

اراکین کا کہنا ہے کہ استعفیٰ آپ کو بھجوائے ہی نہیں، منظور نہ کئے جائیں۔ اسد قیصر نے استعفوں کے آڈٹ کا عندیہ دیدیا، کہتے ہیں کہ دونوں اراکین نے بتایا کہ استعفے جعلی ہیں۔ مسلم لیگ نواز سے تعلق رکھنے والے قومی اسمبلی کے دو اراکین سجاد اعوان اور مرتضیٰ جاوید عباسی کے استعفیٰ قومی اسمبلی کو موصول ہوئے تھے، جس کے بعد دونوں اراکین نے اسے سازش قرار دیا تھا۔

اراکین اسمبلی کا کہنا تھا کہ انہوں نے استعفے اپنی قیادت کو جمع کرائے تھے، اسپیکر تک کیسے پہنچے نہیں پتہ۔ اراکین اسمبلی نے اسپیکر سے ملاقات میں وضاحت پیش کرتے ہوئے کہا کہ استعفے آپ کو بھجوائے ہی نہیں، منظور نہ کئے جائیں، معاملے کی تحقیقات کروائیں کہ استعفے آپ تک کیسے پہنچ گئے، ہم نے اپنے استعفے پارٹی قیادت کو بھجوائے تھے۔ مسلم لیگ ن کی رہنماء مریم نواز شریف نے ایک جلسے کے دوران اپنے اراکین اسمبلی کو ہدایت کی تھی کہ وہ استعفیٰ واپس نہ لیں جبکہ اسپیکر قومی اسمبلی سے بھی کہا تھا کہ وہ استعفیٰ منظور کرلیں۔

مریم نواز کی ہدایت کے برعکس مسلم لیگ ن کے ایم این ایز سجاد اعوان اور مرتضیٰ جاوید عباسی نے آج (بدھ کو) اسپیکر قوم اسمبلی اسد قیصر سے ملاقات کی اور استعفیٰ دینے سے انکار کردیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں