33

مریم نواز کے فیصلے کے بعد سب کو ضمانت ملنی چاہیے، بلاول بھٹو زرداری

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ سابق صدر آصف علی زرداری کی طبعیت ناساز ہے، ان کی میرٹ اور طبی بنیادوں پر ضمانت ہو سکتی ہے، امید کرتا ہوں سب کے لیے ایک ہی قانون ہوگا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو میں ان کا کہنا تھا کہ منگل کے روز آل پارٹیز کانفرنس (اے پی سی) بلائی گئی ہے۔ مولانا فضل الرحمان نے ہم سے کوئی پلان شیئر نہیں کیا، امید ہے کہ وہ اے پی سی میں پلان شیئر کریں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ آصف زرداری کے خلاف تمام مقدمات جھوٹے ہیں۔ کیس کس صوبے میں چلنا چاہیے؟ یہ فیصلہ سپریم کورٹ کرے گی۔ جہاں جرم ٹرائل وہاں چلنا آصف زرداری کا حق ہے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ ہمیں عدالت سے انصاف کی پوری امید ہے۔ ماضی کی غلطیوں سے نقصان ہوا، اس بار امید ہے انصاف ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کی صحت حکومت کے ڈاکٹر کے ہاتھوں میں ہے، انھیں ذاتی معالج سے علاج کی سہولت ملنی چاہیے۔

ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت نے غریب نہیں امیروں کو ریلیف دیا۔ ارب پتی لوگوں کو بیل آؤٹ پیکج دیا گیا۔ معاشی حقوق کے تحفظ تک ملک نہیں چل سکتا۔ وفاق کی طرف سے انسانی اور معاشی حقوق پر حملے ہو رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں