کراچی، جناح اسپتال میں برقع پوش نوجوان کا حملہ، دو ڈاکٹر زخمی

کراچی کے جناح اسپتال میں خنجر لے کر آنے والے ایک برقع پوش نوجوان نے حملہ کرکے دو ڈاکٹروں کو لہولہان کردیا، واقعے کے خلاف ینگ ڈاکٹرز نے احتجاج کیا۔

اسپتال ذرائع کے مطابق اتوار کی شب جناح اسپتال کے جنرل سرجیکل وارڈ نمبر 3 میں ایک برقع پوش نوجوان گھس گیا، جس کا مبینہ طور پر ڈاکٹرز سے جھگڑا ہوا۔

اس دوران ملزم نے اپنے پاس موجود خنجر سے ڈاکٹرز پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں دو ینگ ڈاکٹر زخمی ہوئے، شور مچانے پر لوگ جمع ہوگئے جنہوں نے برقع پوش نوجوان کو پکڑلیا، فوری طور پر پولیس طلب کی گئی اور ملزم کو پولیس کے حوالے کردیا گیا۔

اس موقع پر اسپتال کے ڈاکٹرز جمع ہوگئے، انہوں نے حملے کی مذمت کرتے ہوئے سیکورٹی کا مطالبہ کرنے کے ساتھ ساتھ واقعہ کا مقدمہ فوری درج کرنے کا مطالبہ کیا۔

اسپتال ذرائع کے مطابق زخمی ڈاکٹر کو جناح اسپتال کی ایمرجنسی میں منتقل کیا گیا جہاں ان کی مرہم پٹی کے بعد میڈیکولیگل سیکشن نے ایم ایل رپورٹ درج کرلی ہے۔

واقعہ کے حوالے سے کراچی کے صدر تھانے کی پولیس کارروائی کر رہی ہے، ایک اطلاع کے مطابق حراست میں لیا گیا ملزم مبینہ طور پر اسی وارڈ میں کام کرنے والی ایک لیڈی ڈاکٹر کو قتل کرنے کی غرض سے آیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں