حیدر آباد: 5 سالہ بچی کے قتل کیس کا ڈراپ سین ہوگیا

حیدر آباد کے علاقے فقیر کا پڑ میں 5 سالہ بچی کو تشدد کے بعد قتل کرنے کے کیس کا ڈراپ سین ہوگیا، قتل میں سوتیلی ماں ملوث نکلی۔

پولیس کے مطابق سوتیلی ماں آئے دن بچی کو تشدد کانشانہ بناتی تھی زیاتی اور پھر سیڑھی سے گرنے کا ڈرامہ رچایا۔

پولیس حکام کے مطابق پانچ سالہ انابیہ کے قتل کے الزام میں بچی کی سوتیلی ماں کو گرفتار کرکے قتل کا مقدمہ درج کرلیا۔

مقدمہ بچی کے والد محمد نفیس کی مدعیت میں درج کیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہ اس کی پہلی بیوی کا دو سال قبل انتقال ہونے کے باعث اس نے دوسری شادی افشاں سے کی تھی تاہم افشاں اس کی بیٹی کو تشدد کا نشانہ بناتی رہتی تھی اور تشدد کے باعث اس کی بیٹی انتقال کرگئی۔

پولیس حکام کے مطابق ملزمہ نے بچی کے ساتھ زیادتی کا ڈرامہ رچایا اور بعد میں بچی کے سیڑھی سے گرنے کا ڈرامہ رچایا تھا، بچی کے جسم کے مختلف حصوں میں نئے اور پرانے زخموں کے نشانات تھے تاہم پوسٹمارٹم میں بچی کے ساتھ زیاتی کی تصدیق نہیں ہوسکی

اپنا تبصرہ بھیجیں