احد چیمہ کا سول سروس سے مستعفی ہونے کا فیصلہ

وزیراعظم شہبازشریف کی کوششوں کے باوجود بیوروکریٹ احد چیمہ نے سول سروس سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کرلیا۔

احد چیمہ نے پی ٹی آئی دور حکومت میں3 سال قید کاٹی، مسلسل تحقیقات کا سامنا کرنے کے باعث مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا۔ انھوں نے اپنے فیصلے سے وزیر اعظم شہباز شریف کو آگاہ کردیا۔

ذرائع کے مطابق احد چیمہ گزشتہ 13 دنوں سے وزیراعظم شہباز شریف کے ساتھ اسلام آباد میں غیر رسمی طور پر کام کررہے تھے۔ اسٹبشلمنٹ ڈویژن کی جانب سے احد چیمہ کے خلاف تمام انکوائریز ختم کرکے انھیں بحال بھی کا جاچکا ہے۔

احد چیمہ نے پی ٹی آئی حکومت کے دوران میاں شہباز شریف کے خلاف سلطانی گواہ بننے سے انکار کیا تھا۔ کرپشن کی انکوائریز اور کرپشن کی تحقیقات اور گرفتاریوں کے باعث احد چیمہ کی فیملی بھی سخت دلبرداشتہ تھی۔

واضح رہے کہ احد چیمہ نے اورنج لائن، میٹرو لاہور، بھیکی پاور پلانٹ سمیت لاہور کے انفراسٹرکچرسمیت متعدد منصوبے مکمل کیے تھے

اپنا تبصرہ بھیجیں