بجلی کا شارٹ فال 7 ہزار، 468 میگاواٹ، لوڈشیڈنگ دورانیہ 12 گھنٹے تک پہنچ گیا

ملک میں بجلی کا شارٹ فال 7 ہزار، 468 میگاواٹ تک پہنچ گیا، ایندھن نہ ملنے کی وجہ سے متعدد بڑے پاور پلانٹ بند ہوگئے۔ بجلی کی طلب اور پیداوار میں فرق کے باعث ملک بھر میں 10سے 12گھنٹے کی لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے۔

ملک میں توانائی کا بحران سنگین صورتحال اختیارکرگیا۔ بجلی گھروں کوایل این جی اورفرنس آئل کی مطلوبہ مقدار کی عدم فراہمی سے بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ میں اضافہ ہوگیا ہے۔ پاور ڈویژن کے مطابق متعدد بجلی گھر بند ہونے سے بجلی کا شرٹ فال 7 ہزار میگاواٹ سے بھی بڑھ گیا۔ اس وقت ملک میں بجلی کی پیداوار 18 ہزار 31 میگا واٹ جبکہ طلب 25 ہزار میگاواٹ ہے۔

پاور ڈویژن کے مطابق بجلی کی مجموعی پیداواری صلاحیت 36 ہزار16 میگاواٹ ہے۔ پن بجلی ذرائع سے 3 ہزار 674 میگاواٹ، نجی شعبے کے بجلی گھروں سے 9 ہزار 526 میگاواٹ، اورایٹمی بجلی گھر 3 ہزار312 میگاواٹ بجلی پیدا کر رہے ہیں۔ سرکاری تھرمل پاورپلانٹس صرف 786 میگاواٹ پیدا کی جارہی ہے۔

شارٹ فال میں اضافے کے باعث وفاقی دارلحکومت اسلام آباد سمیت ملک بھر میں 10 سے بارہ گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈیشیڈنگ کی جارہی ہے۔ماہ رمضان میں بجلی کی غیر اعلانیہ بندش سے عوام کو سخت پریشانی کا سامنا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں