چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ ٹیسٹ کرکٹ کو تجربہ گاہ بنانے کا سوچنے لگے

لاہور: چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ نے برطانوی میڈیا کو انٹرویو میں کہا کہ پاکستانی عوام کرکٹ کے حوالے سے بہت جذباتی ہے،اسی لیے میرا کام دباؤ سے بھرپور ہے، ہم کھیل کا انداز تبدیل کرنے کیلیے کرکٹرز کا نیا پول لانے کی کوشش کررہے ہیں،انگلینڈ کی ٹیم ٹیسٹ کرکٹ بھی ٹی ٹوئنٹی کی طرح کھیل رہی ہے،اسی مزاج کی وجہ سے راولپنڈی کی بے جان پچ پر میچ کا نتیجہ ممکن بنایا۔رمیز راجہ کا کہنا تھا کہ انہوں نے بابر اعظم سے کہا ہے کہ ٹیسٹ کرکٹ کیلیے ٹی ٹوئنٹی کرکٹرز منتخب کریں،ایک مختلف اپروچ کے ساتھ آپ ٹیم میں نئے چہرے دیکھیں گے،ہم چاہتے ہیں کہ ہماری اگلی نسل انگلینڈ کے طرز کی کرکٹ کھیلے۔ انھوں نے کہا کہ کوئی بھی 5روزہ ٹیسٹ کرکٹ میں دلچسپی نہیں لیتا، یہ بحث پہلے ہی جاری ہے۔ایک سوال پر رمیز راجہ نے کہا کہ ہم آسٹریلیا سے ہوم سیریز کیلیے بھی ایسی پچز چاہتے تھے جہاں ریورس سوئنگ اور اسپن ہو مگر ایسا ممکن نہیں ہوا، آسٹریلوی کیوریٹر کی خدمات حاصل کیں، مٹی کے لیب ٹیسٹ سمیت کئی جتن کیے، شاید مٹی کا ہی مسئلہ ہے کہ مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوئے، ملتان کی پچ کے بارے میں کم ازکم یہ تو معلوم تھا کہ پہلے روز ہی گیند اسپن ہوگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں